Manjhdaar e Ishq by Hina Asad

Novel : Manjhdaar e Ishq  
Writer Name : Hina Asad

Mania team has started  a journey for all social media writers to publish their Novels and short stories. Welcome To All The Writers, Test your writing abilities.
They write romantic novels, forced marriage, hero police officer based Urdu novel, suspense novels, best romantic novels in Urdu , romantic Urdu novels , romantic novels in Urdu pdf , full romantic Urdu novels , Urdu , romantic stories , Urdu novel online , best romantic novels in Urdu , romantic Urdu novels
romantic novels in Urdu pdf, Khoon bha based , revenge based , rude hero , kidnapping based , second marriage based,
Manjhdaar e Ishq Novel Complete by 
Hina Asad is available here to download in pdf form and online reading.

$ads={2}
 

وہ دبے قدموں
سے بستر کی جانب آئی ہے مگر پائل کی مدد ھم سی چھن چھن کی آواز پورے کمرے میں پھیل
رہی تھی۔ اس نے احتیاط سے کمفرٹر پاؤں سے سر تک اوڑھ لیا۔ اور بیڈ کی ایک سائیڈ پر
سمٹ کر لیٹ گئی کچھ ہی لمحوں بعد اپنی کمر پر حافی کا رینگتا ہوا ہاتھ محسوس ہوا
اطوفہ کا دل کانپ کر رہ گیا ۔ حافی نے اس کی کمر پر ہاتھ ڈال کر نرمی سے اپنی جانب
کھینچا ۔ اس کی مہندی کی خوشبو کو اپنے سانسوں میں بساتے ہوئے تمہیں کیا لگا میں
سو گیا ہوں ۔ اپنے عشق کو پا لینے کے بعد کس کافر کو نیند آتی ہےحافی نے خمار آلود
آواز میں اطوفہ سے کہا۔ اطوفہ کی پشت حافی کے سینے سے لگ رہی تھی۔ حافی کی گرم
سانسوں کی تپش اطوفہ کو اپنی گردن پر محسوس ہو رہی تھی۔ حافی پلیز نہ کریں۔۔ میرا
دل بہت تیزی سے دھڑک رہا ایسا لگ رہا ہے ابھی سینے سے بھی باہر آ جائے گا۔ اطوفہ
نے منت بھرے لہجے میں کہا
! اگر اجازت ہو تو میں اسے ہاتھ رکھ کر باہر نکلنے سے روک سکتا
ہوں ہو اس نے رومینٹک انداز سے کہتے ہوئے اس کا رخ اپنی جانب کیا اطوفہ اس کی
مدہوش آنکھوں کی تاب نہ لاتے ہوئے اپنی آنکھیں موند گئی۔ حافی نے جھک کر اپنے لب
اس کے گلابی لبوں سے الجھا دیے اور اپنی شدتیں اس پر لٹا نے لگا۔ دھڑکتے دل کی
رفتار نے مزید تیزی پکڑی اطوفہ کو اپنا خون منجمد ہوتا محسوس ہوا حافی کو جب اطوفہ
کی سانسوں کی رفتار سے پریشانی ہوئی تو اس نے اسے چھوڑتے ہوئے سائیڈ لیمپ روشن کیا
تاکہ اس کی حالت جان سکے۔ اطوفہ کے لرزتے عارض اس کے ٹھیک ہونے کی گواہی دے رہے
تھے ۔۔۔ لیمپ آف کرتے ہی حافی نے پوچھا؟
My
dear wife are you willing…..(
رضا مند) “بالکل بھی نہیں” اطوفہ نے جھٹ جواب دیا۔۔ اطوفہ کا جواب
سنتے ہی حافی مسکرایا۔۔۔۔
As expected
answer….
یہ کہتے ہی حافی نے اس کی بیوٹی بون پر اپنے
دہکتے لب رکھے۔ تمہیں پتا ہے نہ کہ اپنے شوہر کو انکار کرنے والی بیویوں پر فرشتے
ساری رات لعنت بھیجتے رہتے ہیں اطوفہ اس کو روکنے کے لیے معصومانہ کوششیں کر رہی
تھی۔۔۔۔ آپ مردوں کو اپنے مطلب میں اسلام کے سب شقیں یاد ۔۔۔۔۔۔۔۔۔اس سے پہلے کہ
اطوفہ اپنا جملہ مکمل کرتی حافی نےاپنے لب اس کے لبوں پر رکھ کر اسے بولنے سے
روکا۔
No sound Only feel the hei…

Click on the link given below to Free download Pdf
It’s Free Download Link

Media Fire Download Link

Click Now 


$ads={1}
Online Reading

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *