Toote Khuwabon Ki Malka By Khan Zadi

  

Novel : Toote Khuwabon Ki Malka Complete Novel
Writer Name :  Khan Zadi
Category : Sad Novel

Khan Zadi is the author of the book Toote Khuwabon Ki Malka Pdf. It is an excellentrude Sad novels,
Mania team has started  a journey for all social media writers to publish their Novels and short stories. Welcome To All The Writers, Test your writing abilities.
They write romantic novels, forced marriage, hero police officer based Urdu novel, suspense novels, best romantic novels in Urdu , romantic Urdu novels , romantic novels in Urdu pdf , Bold romantic Urdu novels , Urdu , romantic stories , Urdu novel online , best romantic novels in Urdu , romantic Urdu novels romantic novels in Urdu pdf, Khoon bha based , revenge based , rude hero , kidnapping based , second marriage based, social romantic Urdu, Toote Khuwabon Ki Malka Novel Complete by Khan Zadi is available here to 

سات سال پہلے !!!!

ذونیشہ عمیر کیا اپ کو شاہ ویر المیر حق مہر دس لاکھ روپے کے ساتھ قبول ہے؟

مولوی صاحب نے جیسے ہی پوچھا

ذونی کو کھانسی شروع ہو گئی سب اس کو دیکھ رہے تھے پر زونی کے منہ سے خون نکلتا دیکھ کر شاہ ویر تو مانو بت بن گیا ہو

زونی بے خوش ہو گئی ویر ذونی کو باہوں میں اٹھاتا باہر کی طرف بھاگا

گاڑی میں ذونی کو اگلی سیٹ ہر بٹھا کے خود ڈرائونگ سیٹ سنبھالتا جلدی سے گاڑی بھگا لے گیا

سب ہاسپٹل میں ICU کے باہر کھڑے دعا گو تھے

جب ڈاکٹر ان کی طرف آتا بولا مریض کی حالت کافی خراب ہے کینسر لاسٹ سٹیج پر ہے

کیا کینسر سب ڈاکٹر کی بات سن کر سکتے میں چلے گئے

پیشنٹ آپ میں سے شاہ کون ہے اس کو بلا رہی ہیں نرس باہر آتی بولی

شاہ ہوش میں آتا مر ے مرے قدموں سے ڈاکٹر کے پیچھے چل دیا

اندر جاتے ہی اس کی سانس خلق میں ہی اٹک گئی ۔

مشینوں کی بیپ بیپ کی آواز آ رہی تھی کمرے میں چاروں طرف خاموشی چھائی تھی

سامنے انہیں مشینوں میں جکڑا وجود لیٹا نظر آیا

آنکھوں کے نیچے سیاہ حلقے دودھیا رنگت اب زرد تھی۔

نشو؟؟

اپنے نام کی پکار سن کر ذونی نے اپنی آنکھیں کھولی سامنے کی اس کی دشمن جان تھی جو بکھرے بال سوجی ہوئی لال آنکھوں سے اسے دیکھ رہا تھا

ایک زخمی مسکراہٹ نے اس کے ہونٹوں کو چھوا۔

کککیا ہہوا اب ر رو ککیوں رہے ہو چاہتے تھے نا تمہیں چھوڑ کر چلی جاؤں اب تمہاری خواہش پوری کر رہی ہو تو جانے بھی نہیں دیتے رو رہے ہو

پلیز نشو مجھے چھوڑ کے نا جاؤ مجھ سے غلطی ہو گئی میں شرمندہ ہوں بہت زیادہ اپنے ہاتھوں میں سر گرا کر رونے لگ گیا

میری آخری خواہش پوری کرو گے؟؟

نشو پلیز

میرے مرنے کے بعد تم شادی کر لینا اور اپنی بیٹی کا نام ماہا رکھنا بچپن میں تمہارے ساتھ نام جب جڑا تھا میں نے سوچا تھا ہماری بیٹی کا نام ماہا رکھوں گی پر یہ خواہش پوری نہیں کر سکی میں۔

میں نے کہا تھا تمہارے پاس آنے سے پہلے میں مرنا پسند کروں گی

SHAH VEER I LOVE U.

نشو نشو

ڈاکٹر جلدی آئیں میری نشو بول نہیں رہی

اب خاموش کمرے میں بس ٹٹٹٹٹٹٹٹ کی آواز تھی

 

  • Download in pdf form and online reading.
  • Click on the link given below to Free download 53 Pages Pdf
  • It’s Free Download Link

Media Fire Download Link

Click Now 


$ads={1}
Online Reading

$ads={2}


ناول پڑھنے کے بعد ویب کومنٹس باکس میں اپنا تبصرہ پوسٹ کریں اور بتائیے آپ کو ناول کیسا لگا ۔ شکریہ

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *